شیئر
Views
  • صوبہ Open for Edit

اسٹارٹ اپ اِنڈیا

اِس صفحہ میں اسٹارٹ اپ اِنڈیا یوجنا اَور تَفْصِیلی کام کی منصوبہ بندی کو بتایا گیا ہے۔

کردار

حکومت ہند کی ایک اہم پہل ہے جِس کا مقصد ملک میں اسٹارٹ اپس اَور نئے خیالات کے لئے ایک مضبوت ماحولیاتی نظام کی تعمیر کرنی ہے جِس سے ملک کی اقتصادی ترقی ہو اَور بڑے پیمانے پر روزگار کے موقع پَیدا ہوں۔

اسٹارٹ۔اپ ایکشن پلان کا اختصار

اسٹارٹ۔اپ یوجنا کو حاصل کرنے کے مقصد سے حکومت ہند نے اِس کا ایکشن پلان یا کام کی منصوبہ بندی کو دِکھایا ہے جو کہ اسکے مقصد اسٹارٹ۔اپ یوجنا کے تمام پہلووں کو شامل کرتا ہے۔

اسٹارٹ۔اپ ایکشن پلان بنیادی طور پر اِن تین وسیع حصوں میں مُنْقَسَم ہے :-

  1. آسان اَور ابتدائی امداد
  2. حمایت اَور حوصلہ افزائی امداد
  3. صنعت۔تعلیمی دنیا(اکیڈمیا)شراکت داری اَور متعدی

اسٹارٹ اپ کی تعریف(صرف سرکاری اسکیموں کے لئے)

اسٹارٹ اپ ایک اکائی ہے،جو ہندوستان میں پانچ سال سے زیادہ سے رجسٹرڈ نہیں ہے اَور جِس کا سالانہ کاروبار کسی بھی مالی سال میں 25 کروڑ روپیہ سے زیادہ نہیں ہے۔ یہ ایک اکائی ہے جو ٹیکنالوجی یا ذہانات سے متاثر نئے مصنوعات یا خدمات کے جِدّت، ترقی، صف آرائی یا تجارت پرستی کی سمت میں کام کرتی ہے۔

اسٹارٹ۔اپ ایکشن پلان

تسہیل اَور ابتدائی مدد

خود کی تصدیق پر منحصر تعمیلی انتظام

اِس کا مقصد اسٹارٹ اپس پر انضباطی کا بوجھ کم کرنا ہے تاکہ وہ اپنے خاص کاروبار پر دھیان مرکوز کر سکیں اَور تعمیل کی لاگت کم رکھ سکیں۔انضباطی انتظامات اس طرح اَور آسان اَور لچِیلی ہوں‌گی اَور جائزہ اور زیادہ بامعنی اَور آسان ہوگا۔

اسٹارٹ اپ اِنڈیا ہب

پُورے اسٹارٹ اپ ماحولیاتی نظام کے لئے ایک رابطہ مقام کی تعمیر جِس سے علم کا مبادلہ اَور سرمایہ کاری ہو سکیں۔سرکار اہم اسٹیک ہولڈر ہوگی اَور مرکز اَور ریاستی سرکاروں،ہندوستانی اَور غیر ملکی سرمایہ داروں،اینجیل نیٹ ورک،بینکوں،انکیوبیٹروں،قانونی شراکت داروں،صلاح کاروں،یونیورسٹیوں اَور تحقیق اَور ترقیاتی اداروں کے ساتھ مِل‌کر کام کرے‌گی۔

موبائل اپلیکیشن اَور پورٹل کا رول آؤٹ کرنا

سرکار اَور انضباطی اداروں کے ساتھ اسٹارٹ اپس کے لئے ایک انٹریکٹِو منچ کے طور پر کام کرے‌گا۔1 اپریل،2016 سے  یہ سبھی اہم موبائل / اسمارٹ ڈیوائس پلیٹ فارموں پر میسّر کرایا جائے‌گا۔

قانونی امداد اَور کم شرح پر  تیزی سے پیٹینٹ آزمائش

ذہانتی حق کو بڑھاوا دینے اَور بیداری لانے اَور نئے اسٹارٹ اپس کی دوامی ترقی اَور ترقی کو متعین کرنے کے لئے،یہ اسکیم پیٹینٹ داخل کرنے کے کام کو آسان کر دے‌گا۔

اسٹارٹ اپس کے لئے عوامی خرید‌کے پرسکون معیاری اصول

اِس کا مقصد تجربہ کار کمپنیوں کے مقابلے میں اسٹارٹ اپس کے لئے یکساں مواقع فراہم کرنا ہے۔ سرکار یا عوامی کارجوئی کے ذریعے جاری ٹینڈرس کے معاملے میں خوبی معیارات میں چھوٹ کے بغیر اسٹارٹ اپس کو ' پیشگی توقع / ٹرن اوور ' کے معیاری اصولوص میں چھوٹ دی جائے‌گی۔

اسٹارٹ اپس کے لئے فوری نکاسی

یہ کام یوجنا اسٹارٹ اپس کے لئے ناکامی کی صورت حال میں جاری عمل کو بند کرنے میں آسانی فراہم کرے‌گا۔اسٹارٹ اپس کے لئے ایک انسولوینسی پروفیشنل فراہم کیا جائے‌گا جو چھے مہینے کے وقت میں لین داروں کی ادائیگی کے لئے کمپنی کی اثاثوں کو بیچنے کا انچارج ہوگا۔یہ عمل محدود ذمہ داری کی نظریہ کو منظور کرے‌گا۔

حمایت اَور حوصلہ افزائی امداد

اسٹارٹ اپس کے لئے رقم کا انتظام

سرکار ہرسال 2500 کروڑ روپیہ کی ایک شروعاتی فنڈ اَور 4 سال کی مدت میں کُل 10،000 کروڑ روپیہ  فنڈ قائم کرے‌گی۔

اسٹارٹ اپس کے لئے کریڈٹ گارنٹی

اسٹارٹ اپس کے لئے وینچر قرض میسّر کرانے کے لئے بینکوں اَور دیگر قرض دہندہ کو حوصلہ افضائی کرنے کے لئے،قَومی کریڈٹ گارنٹی ٹرسٹ کمپنی کے (NCGTC)کے ذریعے کریڈٹ گارنٹی نظام / سِڈبی کے ذریعے ہرسال 500 کروڑ کے بجٹ کا اہتمام اَگلے چار سال کے لئے کرنے کا خیال کیا جا رہا ہے۔

کیپٹل گین پر محصول میں چھوٹ

اسٹارٹ اپس میں سرمایہ کاری کو بڑھاوا دینے کے لئے حکومت اُن کو کیپٹل گین میں چھوٹ دے‌گی جِن کو سال کے دوران سرمايہ نفع ہوا ہے اَور جِنہوں نے سرکارکے ذریعے تسلیم شدہ فنڈ آف فنڈس میں اس طرح کے سرمايہ نفع کی سرمایہ کاری کی ہے۔

اسٹارٹ اپس کو تین سال کے لئے ٹیکس چھوٹ

ہندوستان نے سٹارٹاپس کی کاروباری سرمایہ ضرورت کو خطاب کرنے، ترقی کی  حوصلہ افضائی کرنے اَور اُنہیں مدمقابل منچ فراہم کرنے کے لئے اسٹارٹ اپس کے منافع کو 3 سال کی مدت کے لئے محصول سے آزاد رکھا جائے‌گا۔

مناسب بازار قیمت پر سرمایہ کاری میں ٹیکس چھوٹ

اسٹارٹ اپس میں اِنکیوبیٹروں کے ذریعے سرمایہ کاری پر  سرمایہ کاری محصول سے آزاد رکھا جائے‌گا۔

صنعت۔تعلیمی دنیا(اکیڈمیا)شراکت داری اَور متعدی

اختراعی نئی کھوج‌کا مظاہرہ اَور امداد منچ فراہم کرنے کے لئے اسٹارٹ اپ تہواروں کا انعقاد۔

ہندوستان میں اسٹارٹ اپ ماحولیاتی نظام کو مضبوت کرنے کے لئے سرکار نے قَومی اَور بین الاقوامی سطح پر اسٹارٹ اپ جلسہ شروع کرنے کی پیشکش کی ہے۔یہ ممکنہ سرمایہ کاروں،صلاح کاروں اَور شَريک اسٹارٹ اپس کو شامل کرتے ہوئے ایک وسیع عوام طبقے کے سامنے اُن کے کام اَور خیالات کا مظاہرہ کرنے کے لئے ایک منچ ہوگا۔

اٹل ابھینَو مِشن(اے آئی ایم)کا خود  روزگار اَور صلاحیت استعمال(سیتو)پروگرام کے ساتھ لانچ-

یہ خصوصی طور پر ٹیکنالوجی ہدایت دادہ علاقوں میں عالمی سطح کے اختراعی ہب،گرانڈ چیلینجز، اسٹارٹ اپ کاروبار اَور دیگر آزاد پیشہ سرگرمیوں کو بڑھاوا دینے کے لئے ایک منچ کے طور پر کام کرے‌گا۔

انکیوبیٹر سیٹ اپ کے لئے ذاتی علاقے کی مہارت کا استعمال

سرکار عوامی ذاتی شراکت داری میں ملک بھر میں انکیوبیٹروں کی تنصیب کے لئے ایک پالسی اَور ڈھانچے کی تعمیر کرے‌گا۔

قَومی اداروں میں اختراعی مراکز کا قیام

ملک میں تحقیق اَور ترقی کے کوششوں میں اضافہ کے لئے سرکار قَومی اداروں میں اختراع اَور کارجوئی کے 31 مراکز  قائم کرے‌گی۔طلباء کے ذریعے اسٹارٹ اپس کی حوصلہ افضائی کرنے کے لئے 13 مراکز کو 50 لاکھ روپیہ کی سالانہ مالی امداد 3 سال کے لئے فراہم کی جائے گی۔

آئی آئی ٹی مدراس میں قائم شُدہ تحقیقی پارک کی طرز پر تحقیقی پارکوں کا قیام،

ماہرین تعلیم اَور صنعت کی مشترکہ تحقیق اَور ترقی کی کوششوں کے ذریعے کامیاب اختراعات کی ترقی کرنے کے لئے سرکار 100 کروڑ روپیہ فی ادارے کی شروعاتی سرمایہ کاری کے ساتھ اداروں میں 7 نئے تحقیقی پارک  قائم کرے‌گی۔یہ تحقیقی پارک آئی آئی ٹی مدراس میں قائم شُدہ تحقیقی پارک کی طرز پر ہوں‌گے۔

حياتی ٹيکنالوجی سیکٹر میں اسٹارٹ اپس کو  بڑھاوا دینا

ہندوستان میں حياتی ٹيکنالوجی کا میدان ایک مضبوت ترقی کے راستے پر ہے۔حياتی ٹيکنالوجی محکمہ سال 2020 تک 2000 اسٹارٹ اپس  قائم کرنے کے لئے ہرسال قریب 300۔500 نئے اسٹارٹ اپس  کی تنصیب کے لئے کوشاں ہے۔

طلباء  کے لئے اختراع  پر مرکوز  پروگراموں کی شروعات

سرکار نوجوان طلباء کے درمیان تحقیق اَور اختراع کو بڑھاوا دے‌گی اَور اِس کے لئے پروگراموں جیسے اختراعی کور،فنڈ(ایک گرانڈ چیلنج  پروگرام)،اُچّتر  اویشکار  یوجنا وغیرہ کی شروعات کی ہے۔شروعات میں یہ اسکیمیں صرف آئی آئی ٹی کے لئے لاگو  ہوں‌گے اَور ہرایک منصوبہ بندی 5 کروڑ روپیہ تک کی ہو سکتی ہے۔

سالانہ انکیوبیٹر گرانڈ چیلنج

انکیوبیٹرس ایک موثر اسٹارٹ اپ ماحولیاتی نظام کی تعمیر کرنے کے لئے شروعاتی مرحلے میں اسٹارٹ اپس کی پہچان کرنے اَور اُنہیں اپنی گردش زندگی کے مختلف مراحل میں حمایت دینے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ سرکار پَہلے حصے میں عالمی سطح کے انکیوبیٹروں کی تعمیر کی سمت میں سرمایہ کاری کرنے کی پیشکش کر رہی ہے۔ شروعاتی ہدف ایسے 10 انکیوبیٹروں کو قائم کرنا ہے۔ اِس کے لئے سرکار عالمی معیار  بننے کے لائق 10 ممکنہ انکیوبیٹروں کی پہچان کرے‌گی۔ اِن میں سے ہر ایک کو مالیاتی امداد کے طور پر 10 کروڑ روپیہ دئے  جائیں‌گے اَور یہ اس طرح کے دیگر انکیوبیٹروں کے لئے ریفرنس ماڈل بنیں‌گے۔ اس کے بعد اِن کو اسٹارٹ اپ اِنڈیا پورٹل پر نمائش کیا جائے‌گا۔ ایسے انکیوبیٹروں کی پہچان کے لئے گرانڈ چیلنج مقابلہ منعقد کیا جائےگا اَور اِس کو سالانہ طور پر جاری رکھا جائے‌گا۔

اسکیم کی اہم باتیں

  1. اسٹارٹ اپ کاروباریوں کے ذریعے کمایا جانے والے منافع پر کاروبار شروع ہونے کے پہلے تین سال تک اِنکم ٹیکس سے چھوٹ ہوگی۔
  2. ایسے کاروباروں میں سرمایہ کاری کو بڑھاوا دینے کے لئے کاروباریوں کے ذریعے کی گئی سرمایہ کاری کے بعد اپنی جائیداد بیچنے پر 20 % کی شرح سے لگنے والے سرمايہ نفع ٹیکس سے بھی چھوٹ ہوگی۔یہ چھوٹ سرکار کے ذریعے تسلیم شدہ وینچر کیپٹل فنڈ کی سرمایہ کاری پر بھی میسّر ہوگی۔
  3. سرکار کا ' اسٹارٹ اپ اِنڈیا ' پروگرام ملک میں اختراعی کو بڑھاوا دینے کے لئے مناسب ماحول بنانا ہے تاکہ اقتصادی ترقی کو بڑھاوا دیا جا سکے اَور ملک میں بَڑے  پیمانے پر روزگار کے موقع مہیّا کرائی جا سکیں۔
  4. سرکار کی طرف سے ایک قَومی قرض گارنٹی ٹرسٹ کمپنی بنانے کی تجویز ہے جِس میں اَگلے چار سال تَک سالانہ 500 کروڑ روپیہ کا بجٹ تقسیم کیا جائے‌گا۔
  5. ملک میں اختراعی سوچ‌کے ساتھ آنے والے تکنیک پر منحصر اِن نئے کاروباریوں کے لئے ایک جینرَس پیٹینٹ انتظام بھی لایا جائے‌گا۔ پیٹینٹ نامزدگی میں اِن کاروباریوں کو نامزدگی فیس میں 80 % چھوٹ دی جائےگی۔
  6. محترم وزیر اعظم کے مُطابق دیوالہ قانون میں اسٹارٹ اپ کاروباریوں کو کاروبار بند کرنے کے لئے آسان نکاسی اختیار دینے کا اہتمام بھی کیا جائےگا۔اِس کے تحت 90 دن کی مدت میں ہی سٹارٹ اپ اپنا کاروبار بند کر سکیں‌گے۔
  7. طلباء کے لئے اِنوویشن کے کورس شروع کئے جائیں‌گے اَور 5 لاکھ اسکولوں میں 10 لاکھ بچّوں پر فوکس کرکے اِس کو بڑھایا جائےگا۔
  8. محترم وزیر اعظم  نے کہا کہ خود تصدیقی پر منحصر تعمیلی انتظام سے اسٹارٹ اپ پر انضباطی بوجھ کم ہوگا۔ خود تصدیقی تعمیل کی یہ اہتمام اہلکاروں کو گریچیوٹی ادائیگی، ٹھیکہ اہلکار، اہلکار  پراویڈنٹ فنڈ، پانی اَور فضائی آلودگی قوانین کے معاملے میں میسّر ہوگی۔
  9. اسٹارٹ اپ کو سرمایہ کاری کی حمایت دینے کے لئے سرکار 2،500 کروڑ روپیہ کی شروعاتی فنڈ بنائے‌گی جِس میں اَگلے 4 سال کے دوران تمام 10،000 کروڑ روپیہ کا فنڈ ہوگا۔
  10. دُنیابھر میں اسٹارٹ اپ کی تِیسری بَڑی تعداد ہندوستان میں ہے۔ سرکار  اِن کاروباریوں کو سرکاری خرید ٹھیکے لینے کے معاملے میں بھی معیاری سطح میں کئی طرح کی چھوٹ دے‌گی۔ اسٹارٹ اپ کاروباریوں کو سرکاری ٹھیکوں میں تجربہ اَور کاروبار حد کے معاملے میں چھوٹ دی جائےگی۔
  11. اِس میں خواتین کے لئے خاص انتظام کیا گیا ہے۔

ماخذ : اسٹارٹ اپ اِنڈیا
متعلقہ ماخذ :
اسٹارٹ اپ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے اِس لِنک میں جائیں
اسٹارٹ اپ تسلیم کے لئے اپنی درخواست بھرنے کے لئے اِس لِنک میں جائیں
20 % تَک امداد کے لئے درخواست نامہ کے خاکہ کے لئے اِس لِنک میں جائیں
کِسی پی.جی. تعلیمی ادارہ قائم شُدہ انکیوبیٹر کا سفارش نامہ خاکہ
حکومت ہند کے ذریعے تسلیم شدہ کِسی انکیوبیٹر کا سفارش نامہ خاکہ
ہندوستان / ریاستی حکومت کے ذریعے امداد حاصل انکیوبیٹر کا خط نامہ
اسٹارٹ اپ تسلیم کی تصدیق

3.4375
اپنی تجاویز ارسال کریں (اگر مذکورہ بالا مواد پر آپ کو کوئی تبصرہ/تجویز دینی ہو تو براہ کرم یہاں درج کریں))
Enter the word
Related Languages
Back to top