شیئر
Views
  • صوبہ Open for Edit

اجالا یوجنا

پس منظر

ہندوستان میں کل کھپت میں روشنی کے شعبہ کی شراکت تقریباً 20 فیصد ہے۔ موجودہ وقت میں شعبہ گھریلو اور عوامی روشنی کی روشنی سےمتعلق زیادہ تر ضروریات کی تکمیل ناکارہ، روایتی، چمکيلا بلب سے کی جاتی ہے۔ حکومت ہند ایل ای ڈی کے ذریعے ہندوستان میں تمام 77 کروڑ ناکارہ بلب کو بدلنے کے ہدف کو پانے کے لئے پرعزم ہے۔ اس سے 20،000 میگاواٹ لوڈ کو کم کرنا ممکن ہو گا، 100 ارب کےڈبلیوایچ کی توانائی کی بچت ہوگی اور گرین ہاؤس گیس (جی ایچ جی) میں 80 ملین ٹن کی کمی ممکن ہو پائے‌گی۔ یہ اندازہ لگایا گیا ہے کہ یہ ملک میں تقریباً 5 بڑے تھرمل پاور پلانٹس کی تنصیب کے  برابر ہے۔ اس کے علاوہ، ملک میں صارفین کی بجلی بلوں میں بھی 40،000 کروڑ روپیے کی بچت ہوگی۔ ڈومیسٹک ایفیشئنٹ لائٹنگ پروگرام پر جاکر اپنے گھر کے سب سے قریب واقع تقسیم کیوسک کا پتا لگا سکتے ہیں۔ ایل ای ڈی بلب کو اپنانے والا ہرایک شخص توانائی بچت کے ذریعے کسی اور کے گھر کو بھی روشن کرنے میں مددگار ثابت ہوگا۔

اجالا یوجنا کیا ہے؟

حکومت ہند کے قومی پروگرام انّت جیوتی بائی افورڈیبل ایل ای ڈیز فار آل (اجالا) یعنی انّت جیوتی کے ذریعے سبھی کے لئے ریائتی ایل ای ڈی (اجالا) کی شروعات حال ہی میں بھوپال سے کی گئی۔ اس پروگرام کی عمل آوری وزارت بجلی کی مشترکہ کارجوئی عوامی کمپنی انرجی ایفیشینشی سروسز لمیٹڈ (ای ای ایس ایل) کے ذریعے کی جا رہی ہے۔ ایل ای ڈی مبنی گھریلو  استعداد لائٹنگ پروگرام (ڈومیسٹک ایفیشئنٹ لائٹنگ پروگرام-ڈی ای ایل پی) کو ' اجالا ' نام دیا گیا ہے۔ ابتدائی طور پر اجالا یوجنا کا مکمل عمل درآمد راجستھان، مہاراشٹر، کرناٹک، کیرل، اتر پردیش، ہماچل پردیش، دہلی، ہریانہ، بہار، آندھرا پردیش، پڈوچیری، جھارکھنڈ، چھتّیس گڑھ اور اتّراکھنڈ میں کیا جا رہا ہے۔ کئی اور ریاست اور یونین ٹیریٹری ریاست اس اسکیم سے جڑیں‌گے۔ ای ای ایس ایل کے ذریعے لاگو کی جا رہی اجالا یوجنا کو ملک کے دیہی اور شہری علاقوں میں وسیع طور پر منظور کی گئی ہے۔ بڑے پیمانے پر اس کو منظور کئے جانے کی اہم وجہ ایل ای ڈی بلبوں کی وہ صلاحیت ہے، جس کی طاقت پر وہ کم وولٹیج رہنے پر بھی مسلسل صحیح طریقے سے روشنی دیتے ہیں۔ وہیں، دوسری طرف معمولی بلب اور سی ایف ایل کم وولٹیج میں اکثر اچھی روشنی نہیں دیتے۔

اسکیم کا مقصد

جلد از جلد ہندوستان کے ہر گھر میں ایل ای ڈی بلب پہنچانا ہے۔ جس سے بجلی کی کھپت کم ہوگی، اور انرجی کو زیادہ سے زیادہ بچایا جا سکے‌گا۔

انّت جیوتی بائی ایفورڈیبل ایل ای ڈیز فار آل (اجالا)

اسکیم اجالا کا پورا نام

وزارت بجلی، حکومت ہند

کس وزارت کے ذریعے شروع کی گئی ہے؟

شری پیوش گوئل

مرکزی وزیربجلی

انرجی ایفیشینشی سروس لمیٹڈ (ای ای ایس ایل)

نافذ کا حق

30 اپریل، 2016

اسکیم نافذ کرنے کی تاریخ

9 واٹ

ایل ای ڈی بلب پاور

3 سال

ایل ای ڈی بلب کی وارنٹی

ڈسکام آفس، بجلی بل کیش کاؤنٹر، ای ای ایس ایل کیوسک، ہفتہ وار بازار

ایل ای ڈی بلب ملنے کی جگہ

ایل ای ڈی بلب کی قیمت

اگر آپ اس بلب کو مارکٹ سے خریدتے ہیں تو آپ کو یہ بلب 160 روپیے تک کا ملے‌گا لیکن آپ اس بلب کو بی پی ایل کارڈ سے خریدوگے تو یہ بلب آپ کو 85 روپیے کا ملے‌گا جو کہ مارکٹ قیمت سے بہت کم ہے۔

اجالا یوجنا کی خصوصیات


اس اسکیم میں ہرسال 20 ہزار میگاواٹ لوڈ کی کمی ممکن ہوگی۔
اجالا یوجنا سے بجلی کی بچت ہوتی ہے۔
اس اسکیم میں ہرسال 9 کروڑ بلب بانٹیں جائیں‌گے۔
اس اسکیم میں جو بلب بانٹیں جاتے ہیں اس میں دیگر بلب سے  10 گنا روشنی ہوتی ہے۔

بلب کے لئے کیسے درخواست کریں


سب سے پہلے حکومت ہند کی اپنی ویب سائٹ پر جانا ہوگا قومی اجالا ڈیش بورڈ
ویب سائٹ پر طےشدہ فارم میں اپنی تمام جانکاری بھر‌کر سبمٹ کر دیں۔
اس کے بعد اپنی ساری جانکاری ڈسکام آفس جاکر دیکھیں۔
اس کے بعد آپ اجالا یوجنا کا فائدہ اٹھا سکتے ہیں۔

اسکیم کی اہم باتیں

  • دنیا بھر میں توانائی کی بچت میں سب سے زیادہ شراکت کرنے والوں میں کم کھپت والی گھریلو روشنی بھی شامل ہے۔
  • کم بجلی کی کھپت کر کے نو واٹ کا ایل ای ڈی بلب 100 واٹ کے بلب کے برابر کی روشنی دیتا ہے۔
  • 18 مارچ 2016 تک ای ای ایس ایل نے حکومت ہند کی اجالا یوجنا کے تحت ملک کے 125 شہروں میں ایک سال کے اندر 8 کروڑ سے بھی زیادہ ایل ای ڈی بلب تقسیم کئے ہیں۔
  • اس سے ہرایک سال صارفین کو 5500 روپیے کی بچت کرنے میں مدد ملے‌گی۔ اجالا نہ صرف صارفین کو بجلی بل کم رکھنے میں مدد کرےگی  بلکہ ملک میں توانائی تحفظ میں بھی شراکت کرے‌گی۔ اجالا پروگرام کی نگرانی صاف شفاف طریقے سے قومی سطح پر کی جا رہی ہے۔ ایل ای ڈی بلب کے استعمال سے ماحولیات کی بھی حفاظت ہوگی۔
  • 12 مہینے کی مدت میں 8 کروڑ ایل ای ڈی بلبوں کی تقسیم کا ہدف حاصل کرنے کے نتیجے کے طور پر 2.84 کروڑ کے ڈبلیو ایچ کی روزانہ بچت ممکن ہو پائی ہے۔
  • یہ بچت 365 دنوں تک 20 لاکھ سے بھی زیادہ گھروں کو روشن کرنے کے قابل ہے۔
  • یونٹ کے لحاظ سے بجلی کی بچت کرنے کے علاوہ کاربن ڈائی اکسائڈ کے روزانہ اخراج میں 23،000 ٹن کی کمی کرنے میں بھی کامیابی ملی ہے۔
  • اجالا یوجنا کے تحت تقسیم کی گئی  ایل ای ڈی بلب کی قیمت اس کے بازار قیمت کی ایک تہائی ہے۔
  • بہتر معیار والے ان بلب پر تین سال کی مفت بدل کاری (فری رپلیسمینٹ) وارنٹی بھی دی جاتی ہے۔

اسکیم کی حالت


ہندوستانی فیملی اب کافی تیزی سے ایل ای ڈی بلب کا استعمال کرنے لگے ہیں، تاکہ ان کے گھروں میں بجلی کی کھپت کم ہو سکے۔ انرجی ایفیشینشی سروسز لمیٹڈ (ای ای ایس ایل) نے حکومت ہند کی اجالا (سبھی کے لئے کفایتی ایل ای ڈی کے ذریعے انّت جیوتی) اسکیم کے تحت ملک کے 125 شہروں میں ایل ای ڈی بلب تقسیم کئے ہیں۔ دنیا بھر میں توانائی کی بچت میں سب سے زیادہ شراکت کرنے والوں میں کم کھپت والی گھریلو روشنی بھی شامل ہے۔ 12 مہینے کی مدت کے اندر 8 کروڑ ایل ای ڈی بلب کی تقسیم کا ہدف حاصل کرنے کے نتیجے کے طور پر 2.84 کروڑ کےڈبلیوایچ کی روزانہ بچت ممکن ہو پائی ہے۔ یونٹ کے لحاظ سے بجلی کی بچت کرنے کے علاوہ کاربن-ڈائی-آکسائڈ کے روزانہ اخراج میں 23،000 ٹن کی کمی کرنے سے بھی ملک مستفید ہوا ہے۔
موجودہ وقت میں اجالا یوجنا کا مکمل عمل درآمد راجستھان، مہاراشٹر، کرناٹک، کیرل، اتر پردیش، ہماچل پردیش، دہلی، ہریانہ، بہار، آندھرا پردیش، پڈوچیری، جھارکھنڈ، چھتّیس گڑھ اور اتّراکھنڈ میں کیا جا رہا ہے۔ کئی اور ریاست اور یونین ٹیریٹریز  جلدہی قومی پروگرام لانچ کریں‌گے۔
انرجی ایفیشینشی سروسز لمیٹڈ (ای ای ایس ایل) کے ذریعے لاگو کی جا رہی اجالا یوجنا کو ملک کے دیہی اور شہری علاقوں میں وسیع طور پر منظور کی گئی ہے۔ بڑے  پیمانے پر اس کو منظور کئے جانے کی اہم وجہ ایل ای ڈی بلب کی خاص صلاحیت ہے، جس کی طاقت پر وہ کم وولٹیج رہنے پر بھی مسلسل صحیح طریقے سے جلتے رہتے ہیں۔ وہیں، دوسری طرف چمکیلا اور سی ایف ایل بلب کم وولٹیج میں عام طور پر اچھا مظاہرہ کرنے میں ناکام ثابت ہوتے ہیں۔ یہی نہیں، اجالا یوجنا کے تحت تقسیم کی گئی  ایل ای ڈی بلب کی قیمت اس کے بازار قیمت کی ایک تہائی ہے۔ بہتر معیار والے ان بلب پر تین سال کی مفت بدل کاری وارنٹی بھی دی جاتی ہے

اکثر پوچھے جانے والے سوال

اجالا یوجنا

اجالا یوجنا کیا ہے؟ محترم وزیر اعظم شری نریندر مودی جی نے " پرکاش پتھ "-" روشنی کے لئے راستہ " کی وضاحت ایل ای ڈی بلب کی شکل میں کی ہے۔ ملک میں توانائی کی سمت میں یہ پہل حکومت ہند کی کوششوں کا ایک حصہ ہے۔ اجالا یوجنا کے تحت رہائشی سطح پر موجودہ بلند لاگت کو کم کر کے توانائی کے موثر آلات اور ایل ای ڈی کے استعمال کرنےکی سمت میں صارفین کی بیداری کو بڑھانا ہے I اس اسکیم ڈی ای ایل پی (ڈومیسٹک ایفیشینٹ لائٹنگ پروگرام-ڈی ای ایل پی) کی شکل میں شروعات کی گئی اور بعد میں اس کو اجالا کے طورپر دوبارہ لانچ کیا گیا I

اجالا یوجنا کی اہلیت

کون اجالا یوجنا کے تحت ایل ای ڈی پانے کے اہل ہے اور ایل ای ڈی کی خرید کے لئے کیا ضروریات ہیں؟ ایسے تمام صارفین جن کو بجلی تقسیم کمپنی سے میٹر کے ذریعے کنیکشن دیا گیا ہے وہ اجالا یوجنا پروگرام کے تحت ایل ای ڈی بلب پانے کے لئے اہل ہے۔ صارفین ای ایم ائی ادائیگی (بجلی بل میں ماہوار / دوماہانہ  قسطوں پر) پر یا پیشگی ادائیگی کرکے ایل ای ڈی کی خرید‌ کے لائق ہیں۔ صارفین کو اجالا ایل ای ڈی بلب پانے کے لئے درج ذیل دستاویزوں کو لے جانے کی ضرورت ہے- ای ایم ائی کے لئے-تازہ ترین بجلی بل اور سرکاری آئی ڈی پروف کی کاپی کے متعلق پیشگی کے لئے سرکاری آئی ڈی پروف کی کاپی۔ کہاں اور کیسے ایل ای ڈی بلب کی خرید کی جا سکتی ہے؟ اجالا ایل ای ڈی بلب شہر میں خصوصی نامزد مقامات پر قائم کاؤنٹروں (کیوسک) کے ذریعے تقسیم کی جا رہی ہے۔ یہ خوردہ دوکانوں پر دستیاب نہیں ہوگا۔ تقسیم کاؤنٹر کی تفصیل قومی اجالا ڈیش بورڈ پر دستیاب ہے صارفین سہولت کے لئے یہ مقام جیو ٹیگ ہوں‌گے۔

ایل ای ڈی بلب کی قیمت

ایل ای ڈی بلب کی قیمت کیا ہے؟ اجالا ایل ای ڈی بلب 75 روپیے-95 روپیے فی ایل ای ڈی بلب کی قیمت پر خریدا جا سکتا ہے۔ ایل ای ڈی بلب کی قیمتوں میں فرق ریاست کے لئے ریاست سے محصولوں میں (ویٹ، ٹیکس وغیرہ) کی وجہ سے مختلف ہو سکتی ہے ؛ اس کے ساتھ تقسیم اور بیداری لاگت، ؛ سالانہ رکھ رکھاؤ لاگت (اے ایم سی) ؛ کیپیٹل اور انتظامی لاگت کی لاگت وغیرہ پر بھی منحصر کرے‌گی۔

ایل ای ڈی بلب کی وارنٹی

ایل ای ڈی بلب فیوج ہونے سے کیا کریں گے؟ اس کی وارنٹی ہے؟ اگر تکنیکی خرابی کی وجہ سے ایل ای ڈی بلب کام کرنا بند کر دیں، تو ای ای ایس ایل تین سال کی مدت کے لئے لاگت مفت  بدل عطا کرتا ہے۔ تمام بدل کاری قومی اجالا ڈیشب ورڈ پر ذکر کئے گئے نامزد  بدل کاری / تقسیم کیوسک کے ذریعے ہی ہوگی۔ تقسیم کی مدت کے دوران ان ایل ای ڈی بلب اجالا کیوسک میں سے بدلا جا سکتا ہے۔ تقسیم کے بعد، ریاست مخصوص بدل کاری ڈرائیو ہوگا جس سے کہ خوردہ دکانوں / مقامات جہاں بدل کاری دستیاب ہوگی جانکاری دی جائے‌گی۔

شکایت کا ازالہ

میں اپنی شکایتوں کو کہاں رجسٹر کر سکتا ہوں؟ اس میں صارفین کے لئے دستیاب ازالہ نظام کے 4 قسمیں ہیں-

  • تقسیم کے دوران شکایتوں کو ہماری تقسیم ایجنسی کے کسٹمر کیئر سینڈر نمبر پر کی جا سکتی ہے جو ہمارے اشتہار اور بیداری ڈرائیو میں مشتہر کئے گئے ہیں ای ای ایس ایل کے ذریعے یہ متعین کیا گیا ہے کہ ایک ٹول فری ہیلپ لائن نمبر اجالا بلب بنانے والے کے ذریعے دیا جاتا ہے ساتھ ہی رسیٹ (ادائگی رسید) میں بھی یہ دکھایا گیا ہے۔ ایک بار جب تقسیم کی مدت ختم ہو جاتی ہے تو صارفین ان ہیلپ لائن نمبر کے ذریعے ڈائرکٹر سے رابطہ کر سکتے ہیں اور بلب بدل سکتے ہیں۔ متعلقہ ڈائرکٹر قریب ترین ریٹیل آؤٹ لیٹ کے لئے صارف کی راہنمائی کریں‌گے، جس پر تکنیکی خامیوں کے ساتھ بلب کو بدلا جا سکے۔
  • ای ای ایس ایل ایک مضبوط سماجی میڈیا کا نظام رد عمل ہے، جہاں صارفین اپنی شکایت ای ای ایس ایل کے ٹوئٹر @ ای ای ایس ایل انڈیا کے ذریعے کر سکتے ہیں۔
  • تفصیلی وضاحت اور رابطہ کی تفصیل کے ساتھ infoeesl.co.in پر ای میل بھی بھیجا جا سکتا ہے۔
  • قومی اجالا ڈیش بورڈپر بھی دائیں طرف اوپر  ایک شکایت / شکایت ازالہ ٹیب ہے، صارفین اس پلیٹ فارم کا استعمال کر کے اپنی شکایتوں کو کرنے کے لئے آزاد ہیں جہاں عام طور پر اطلاع کے 48 گھنٹے کے اندر اطمینان بخش حل کی کوشش کی جاتی ہے I

 

اجالا ڈیش بورڈ میں سفید اور نیلے رنگ

اجالا ڈیش بورڈ میں سفید اور نیلے رنگ کس کی نمائندگی کرتا ہے؟ نیلے رنگ ان ریاستوں کو ظاہر کرتا ہے جہاں اجالا تقسیم اسکیم شروع کی گئی ہے اور صارفین کے لئے یہ اسکیم نافذ ہو گئی ہے۔ سفید رنگ ان ریاستوں کو اشارہ کرتا ہے جہاں یہ اسکیم نافذ کرنے کے عمل میں ہے۔ اجالا سرکاری اسکیم ہونے کی وجہ سے کسی بھی ریاست میں شروع کرنے سے پہلے پروٹوکال پر عمل کرتی ہے۔


ماخذ : راشٹریہ اجالا ڈیش بورڈ خطوطی معلومات دفتر

3.0
اپنی تجاویز ارسال کریں (اگر مذکورہ بالا مواد پر آپ کو کوئی تبصرہ/تجویز دینی ہو تو براہ کرم یہاں درج کریں))
Enter the word
Back to top